افسانہ

فاروق مسعودی سند افسانہ "یا بار صاحبو”


فاروق مسعودی چھہ روایت شکن افسانہ نگار تہ یہے امیج ہیتھ آو سہ از برونہہ 40 ؤری نوجوانی منز کاشرِ افسانہ کس منظرنامس پیٹھ۔ امۍ کو٘ر کینہہ فضول سیکنڈ، نوش لب، کوہ قاف، الفتح ہوۍ نوِ طرزکۍ افسانہ لیکھتھ تہ اکھ نٔو وتھ کڈتھ کاشرس ادبس منز اکھ معتبر مقام حاصل۔ نیب پرن والین ہندِ خاطرہ چھہ یہند نو٘و افسانہ "یا بار صاحبو” پیش، یہنزی آوازِ منز۔

افسانس منز سپدۍ وہمہِ صدی پیٹھہ فارمہِ ہندۍ تجربہ، الگ زبانن منز الگ الگ پاٹھۍ مگر اکھ چیز یُس افسانہ چہ کامیابی ہند آفاقی راز چھہ سہ چھہ یہ زِ افسانہ گژھہِ پرن وٲلس تھپھ کٔرتھ ، تس تہ تسندس تخیلس پانس سیتۍ اندس تام پکناون تہ افسانس منز موجود تجربہ کہ مۅلک احساس تہ اقرار کرناون۔ سہ افسانہ ٲسۍ تن پتہ گنڈتھ موضوع تہ سکہ بند فارم یا یمن دۅشونی ہندِ اعتبارہ نافرمان۔ افسانہ روایتی اندازہ سیٹنگ تہ کردار متعارف کٔرتھ شروع گژھہِ یا منزے کُنہِ عملہِ دوران ، افسانس منز کردار غالب روزِ یا امیک پلاٹ، افسانہ خالص ڈايلاگ بٔنتھ پنن مقصد پورہ کرِ یا چھرا بیانیہ، افسانس منز ظاہری تصادم آسہِ، یا باطنی، افسانہ کانہہ تہِ فارم رٹہِ، پرن والۍ سند امہِ کس تجربس منز آورنہ یُن تہ تجربچ تشفی حاصل سپدنۍ چھہ افسانہ چہ کامیابی ہند گۅڈنیک تہ ٲخری قدم۔ کُنہِ تہِ افسانچ قوت چھیہ یتھ کتھہِ منز زِ سہ کتھ حدس تام چھہ پرن والۍ سند تخیل افسانہ کیو حدو نیبر واتناوان۔ "یا بار صاحبو” افسانہ چھہ امہ معیارہ سیٹھا کامیاب افسانہ۔

"یا بار صاحبو "چھہ ہیتی طور ترین منظرن منز تقسیم یمن منز مصنف سنز فلم کاری ٹاکارہ چھیہ۔ اکھ اکس نش مختلف آسنہ باوجود تہ انفرادی طور مکمل آسنہ باوجود چھہِ تریشوے منظر یمن ہندِ ذریعہ پرن وٲلس منز وۅتلاونہ ینہ والہِ تاثرہ کنۍ اکوے موضوع گاشراوان۔ گوڈنکس حصس منز چھیہ اکھ روحانی مایوسی تہ محرومی، یۅس دویمس حصسس منز مرشد سندِ اجاذتہ حیرت انگیز روحانی سفر س منز تبدیل گژھان چھیہ۔ یہ سفر چھہ اکہ حادثک شکار گژھان۔ کہانی ہند آخری حصہ چھہ تتھۍ گھرس تہ تتھۍ قبرِ منز اند واتان ییتہ پیٹھہ کہانی ہند سفر شروع گو٘و۔ یہ افسانہ چھہ انسان سندِ روحانی تلاشک، لبنک تہ راونک داستان۔ اتھ منز چھیہ مایوسی تہِ تہ اطمینان تہِ۔ اطمینانس منز مایوسی تہ مایوسی منز اطیمنان نظرِ گژھان۔

زمرے:افسانہ

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s