تبصرہ

فیس بک طرحی مشاعرہ


تبصرہ: منیب الرحمن

یم غزل چھہِ تقریبا تم سٲری غزل یم فیس بک کٮن گۅڈنکٮن دۅن مشاعرن منز فی البدیہہ، لگ بگ فی البدیہ تہ فرصت سان وننہ آے۔ یمن مشاعرن منز نیو کہنہ مشق کیو تازہ وارد شاعرو برابر دلچسپی سان حصہ ۔ تریمس مشاعرس منز مظفر عازم سنزِ شرکژ سیتۍ ہریوو اتھ سلسلس وقار۔

غزلس منز چھیہ ذاتی تجربن زیو دنچ کمے پہن ریوایت۔ زیادہ تر چھہ یہ مضمون آفرینی سیتۍ آوراونہ آمت تہ اکثر چھہ یمن مضمونن ہندۍ محرک قافیہ تہ ردیف رودۍ متۍ، یمہ کنۍ اتھ صنفس منز اکھ اجتماعیت تہ اکھ یکسانیت پیدہ گژھنک خدشہ روزان چھہ۔ حقیقت چھیہ یہ زِ مخصوص طرز تہ مخصوص نکتہ نظر تہِ چھہ کمنے شاعرن باگہِ یوان۔ غزلس چھیہ اکثر نوِ زمینہ تہ نوۍ ردیف قافیہ نہ صرف تازہ دم کران بلکہ امکان تہِ بخشان۔ یمن غزلن منز تہِ چھہِ امہ رنگۍ کینہہ تجریہ میلان۔ اکھ تجربہ یعنی متحرک حرفس پیٹھ اند واتن وول قافیہ/ردیف چھہ بیک وقت عروضس سیتۍ تہِ تعلق تھاوان۔ فارسی اردو عروضی مشقہ کنۍ چھیہ نہ مصرعہ کس اندس پیٹھ متحرک حرفس کانہہ جاے۔ امہ بندشہ کنۍ ٲسۍ نہ کاشر ۍ غزل گو تم بے شمار قافیہ/ردیف ورتاوان یم یک حرفی لفظ چھہِ تہ متحرک الاخر چھہِ۔ مثلا بہ، ژہ، تہ، تہِ، ہہ، بیترِ ۔ یتھے پاٹھۍ چھہِ بے شمار فعل تہِ مثلا کرہ، کرِ، گژھہ، گژھہِ، ونہِ، روزِ، روزہ، بیترِ۔وژنن منز ٲس نہ وزنچ کانہہ بندش مگر اتھ منز ٲسۍ گیونہ کنۍ ژھوٚٹٮن مصوتن پیٹھ مشتمل لفظ زیٹھراونہ یوان۔ خال کنُہِ لل واکھس، شیخہ شروکس منز یا نایاب پاٹھۍ کنہِ وژنس منز چھہ متحرک آوازِ پیٹھ مصرعہ اند واتان۔ امین کاملن کوٚر غزلس منز یہ تجربہ ابتدایی دۅہنے منز تہ تمہ پتہ رود سہ یم متحرک قافیہ/ردیف والۍ غزل منزۍ منزۍ ونان مگر تس ورٲے تل نہ اتھ خاص پاٹھۍ کٲنسہ فایدہ ، حالانکہ اتھ منز چھہِ سانہِ زبانۍ ہندِ نسبت واریاہ امکان موجود۔ اتھ تجربس تُل پتمین شٮن ستن ورین دوران محمد رمضانن فایدہ۔ تمۍ لیکھۍ غزل ہا یمن ہندۍ قافیہ/ ردیف متحرک حرفن پیٹھ اند واتان چھِہ (مطبوعہ نیب)۔ تمۍ ورتاوۍ متحرک حرفن پیٹھ اند واتن والۍ فعل تہِ ردیفن منز۔ مثلا:

رنگ برگن چھکہِ، خوشبو ژھٹہِ، دل شاد تہِ کرِ
تیتھ تہِ کانہہ پوش یمس باد صبا یاد تہِ کرِ (محمد رمضان)

یوٚہے تجربہ نظرِ تل تھٲوتھ دیت میہ متحرک مصرعس پیٹھ اند واتن وول اکھ طرح، اردو شاعر فرحت احساس سندِ اکہ اردو مصرعک ترجمہ:

ہتٮن ہہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ

اتھ پیٹھ آیہ کم از کم 7 غزل وننہ یمو منزہ تقریبا سٲری فنی تہ معنوی لحاظہ سیٹھا مارۍ مندۍ چھہِ۔ یمن غزلن منز چھہ اتفاقا تقریبا پریتھ شاعرن گاش، ژونگ، واو استعاراتی طور مختلف معنی برآمد کرنہ خاطرہ ورتاوۍ متۍ تہ یم چھہِ پزۍ پاٹھۍ پننہِ پننہِ غزلہِ منز بہترین شعر:

رفیق رازہ مٮہ نارس اندر زمانا گوٚو
نہ تیز دروتھ بناں چھُس نہ تیز کرتل بہ (رفیق راز)

میہ روٚس نہ کانہہ تہِ اکھا واوہ ہالہِ زالاں ژونگ
گوٚمت خدایہ ظہرۍ پورہ پاٹھۍ پاگل بہ (شہناز رشید)

چھہ میون شہہ تہِ گوٚبے میانہِ براندہ کس ژٲنگس
ژہ سونچ پانہ زِ واوس ہیکا کڈتھ کل بہ (برجناتھ بیتاب)

چھہ گاشہ نوو ژ‎ۅاپارۍ اچھ کٔرتھ ژرژان
چھکن کپارۍ الہی یہ رٲژ ہند ملبہ (محمد رمضان)

وچھاں یتھے بہ چھُسن آنگنس اژان یہ گاش
دوان تارۍ برس چھس تہ دارِ ہانکل بہ (نثار عظم)

ہہ گاش ییہ تہ خبر ہییہ نہ رٲژ پہرن تام
فضول دارِ پٹٮن کیازِ تھاوہ ہانکل بہ ( الیاس آزاد)

رفیق راز سندس شعرس منز اگرچہ گاشک استعارہ ورتاونہ چھہ نہ آمت مگر نارچھہ بہرحال گاش تہِ ژھٹان۔ اتھ شعرس منز چھہِ بیک وقت زہ متضاد مضمون۔ گۅڈنچہ نظرِ منز چھہ باسان زِ متکلم چھہ نارس منز ٲستھ تہِ نہ دروت بنان تہ نہ کرتل، مگر “تیز” لفظہ چہ کلیدی حیثیژ کن وچھتھ چھہ یہ مضمون برونہہ کن یوان زِ نار ہیکہِ درٲتس یا کرتلہِ آکار دتھ مگر تیز ہیکیکھ نہ بنٲوتھ، چاہے تم کٍتس تہِ کالس اتھ اندر تپاونہ یِن۔ یہ چھہ “ساری دراے پۅختہ تے بے دراس اوم” کہ قبیلک اکھ نفیس مضمون ۔شہناز سندس شعرس منز چھیہ ناسازگار حالاتن منز کوشش کران روزنچ کتھ یۅس امہ کنۍ بظاہر پاگل پن باسان چھہ تکیازِ یہ شخص چھہ اتھ عملہِ منز کُنے زوٚن۔ ساری چھہِ لوٚب کتھتۍ متۍ۔ یہ مضمون تہِ چھہ نہ نوٚو البتہ موجودہ حالاتن مدنظر چھہ برمحل۔ برجناتھ بیتابن چھہ پننس شعرس منز اکھ بالکل نوٚو مضمون اوٚنمت یمہ مطابق ژونگ اکہ نوزک روایژ ہند استعارہ بنان چھہ یُس امس شخژہ سند گرہ روشن کٔرتھ چھہ۔ اتھ روایژ چھہ امس شخژہ سنزو زندہ روزنہ چیو پننیومجبوریو کنۍ تہِ خطرہ لاحق۔ یمس شخژس امہ روایژ ہند یوت خیال آسہِ زِ سہ کرِ یہ دپۍ زِ تہِ شہہ ہینس پیٹھ تہِ ضبط، سہ کتھہ پاٹھۍ دِیہ تتھٮن اسبابن دعوت یم اتھ روایژ پورہ پاٹھۍ ژھیتہ نِن کٔرتھ۔ امہ مضمونچ عذرخواہی چھیہ بیتابس اکس خاص صورت حالس پیش نظر سنیمژ یس اسہِ سارنی ویوٚد چھہ۔ محمد رمضان سند شعر تہِ چھہ بیتاب سندِ شعرکۍ پاٹھۍ اکھ نوٚو مضمون ہیتھ۔ مگر اتھ منز چھہِ گاشچ پرسانفیکیشن (اچھ کٔرتھ ژرژان) تہ “رٲژ ہند ملبہ” ہش اختراع کرنہ آمژ ترکیب تہ امکۍ استعاراتی معنی زیادہ توجہ طلب۔ رمضانن چھہ پننس غزلس منز غلبہ/ طلبہ/ملبہ ہوۍ قافیہ ورتٲوتھ جدتس کٲم ہیژمژ۔ یہ شعر چھہ معنوی طور مبہم تہ فکرمندی ہنز دعوت دوان۔ متکلمس چھہ منہدم رٲژ ہند ملبہ بار گراں بنیوومت یس نہ تس نیبر کن چھکنس وار چھہ۔ امچ شکایت خدایس کن کٔرتھ چھیہ امچ معنوی تہہ داری ہران۔ نثار عظم سندس شعرس منز چھیہ نہ فکرمندی مگرامۍ تہِ چھہ گاش رمضاننۍ پاٹھۍ شخژوومت تہ شعرس منز اکھ نوٚو مضمون تہ معنوی امکان پیدہ کرۍ متۍ۔ گاشس سیتۍ “یہ” لفظک ورتاو چھہ توجہ طلب۔ اکثر چھہِ یتھۍ ہریمانہ لفظ وزنہ برابری خاطرہ تولس تراونہ یوان مگر یہ شعر چھہ امۍ لۅکٹۍ لفظن کتہِ کور واتنوومت۔ شعرس چھہِ کم از کم زہ معنی ممکن۔ یہ گاش چھہ نہ عام گاش یا سہ گاش یمچ توقع چھیہ بلکہ تیتھ گاش یتھ متکلم “یہ گاش” ؤنتھ لگ بگ طنز کران چھہ۔ متکلم چھہ نہ اتھ قطعا گرس اندر دعوت دنہ خاطرہ تیار۔ غیر طنزیہ معنی ہیکیس یہ نیرتھ زِ متکلم چھہ نہ گرہ کٮن سِرن ننیر گژھنہ کہ خدشہ کنۍ گاشس اندر ینچ کانہہ وتھ دوان۔ دۅشونی صورژن منز چھہ یہ شعر المناک صورت حال پیش کران۔ نثار عظم سند شعرس قریب چھہ الیاس آزادن شعرمگر اتھ منز چھہ اتھ مخالف مضمون گنڈنہ آمت یس سیٹھا دلچسپ چھہ۔ یہ مضمون تہِ چھہ نوٚو تہ نایاب تہ اکھ تیتھ صورت حال خلق کران یس سیٹھا معنی آفرین چھہ۔ امہ خدشہ زِ گاش ہییہ سانٮن رٲژ پہرن تام حساب، چھہِ اسۍ بلیک آوٹ کٔرتھ ینہ والہِ وقتکۍ امکان پانس پیٹھ حرام کٔرتھ نوان۔ یہ چھہ اکھ بہترین مضمون۔

یم ساری شعر پٔرتھ چھہ یقین سپدان زِ سانۍ نوۍ نوۍ شاعر چھہِ نہ صرف نوٮن استعارن تلاش کران بلکہ پرانٮن استعارن منز تہِ نوۍ امکان تہ نوۍ معنی پیدہ کرنچ سۅد بۅد تھاوان۔ پیٹھہ کنہِ دنہ آمتۍ ہوۍ کامیاب شعر چھہِ پزۍ پاٹھۍ کاشرِ شاعری ہنزِ خۅش آیندگی ہنز ضمانت پیش کران۔

پیٹھمہِ طرح کس “بہ” ردیفس مقابلہ اوس بییس طرحس منز “سٲری” ردیف وول رفیق رازُن اکھ مصرعہ دنہ آمت۔ اتھ طرحس پیٹھ موصول غزلو منزہ چھہِ کینہہ شعر پیش یم توجہ طلب چھہِ۔

ژانگۍ ہوۍ اسۍ راتھ کیت شولاں چھہِ سٲری
زیر لج پردس تہ بس لرزاں چھہ سٲری (رفیق راز)

شرۍ جماتھا چھم تہ گرہ چھم ونہِ تہِ وہرتھ
کُس اتر کوٚرمت یہ چھکھ مندچھاں چھہِ سٲری (شانتی ویر)

اکھ ہوا رنگ، آبہ جۅے، بلبل تہ جنگل
یتھ دلس گدرس میہ تنبلاواں چھہِ سٲری (خالد بشیر)

ٲس کمہِ پوشچ سۅ خۅشبو اسہِ ژۅاپارۍ
وۅنۍ ستن وارٮن اندر ژھاراں چھہِ سٲری (محمد رمضان)

گاش کوٚرمت چھکھ دفن غارن گۅپھن منز
انہِ گٹس منز قد پنن میناں چھہِ سٲری (ظفر مظفر)

یس وسے سونچاں بہ دمہا نالہ اتھ منز
یتھ سیکستانس توے زاگاں چھہِ سٲری (نثار عظم)

رفیق راز نہِ غزلک مطلع چھہ اکھ پراسرار صورت حال پیش کران چھہ، یتھ منز نامعلوم خوف، پردہ، شولونۍ ژانگۍ اکھ داستان بیان چھہِ کران یتھ سانہِ نفسیاتی زندگی سیتۍ تعلق باسان چھہ۔ شانتی ویر سند شعر چھہ غزلہ کیو روایتی مضمونو نیبر نیرتھ اکس خاص سماجی، اقتصادی صورت حالس کن اشارہ کران۔ غزلکۍ ایمایی مضمرات چھہِ ییتیاہ قوی آسان زِ میہ چھہ شانتی ویر سند یہ شعر غالب سند مشہور شعر یاد پاوان” ہزاروں خواہشیں ایسی۔۔۔” خالد بشیر سند شعر چھہ اکھ عام مضمون اکس خوبصورت اندازس منز پیش کران۔ یہ شعر چھہ سٲنس مخصوص سیاسی صورت حالس کن تہِ اشارہ کران یتھ منز عام انسانہ سنز سادہ مزاجی ظاہر چھیہ۔ محمد رمضان سند شعر چھہ ہاوان زِ تمن چیزن ہندس راونس پیٹھ کتھہ پاٹھۍ چھہ انسان پایس پیوان یم سہ فار گرانٹڈ نوان چھہ۔ یہ شعر چھہ یقین تہ روحانی قدرن ہندس راونس کن اکھ بلیغ اشارہ۔ ظفر مظفر سند س شعر س منز چھہ گاش غارن منز دفن کرُن اکھ دلچسپ تضاد پیش کران۔ امہ شعرک علامتی پہلو چھہ ظاہر۔ یہ شعر گژھہِ پتمہ طرح کٮن گاش کس استعارس سیتۍ تعلق تھاون والٮن باقی شعرن سیتۍ پرُن۔ نثار عظم سند شعر تہِ چھہ سیٹھا دلچسپ ۔یتھ بیہ وقعت سیکستانس کن کانہہ کانہہ مجبورا لگان اوس تتھ چھیہ تیژ تھپہ تھپھ زِ پریتھ کانہہ چھہ یہ دپۍ زِ تہِ زاگان۔ یہ شعر چھہ جبر تہ مجبوری ہندِ حبسہ دمک صورت حال پیش کران ۔

بیاکھ طرحک مصرعہ اوس عبدالاحد آزاد سند اکھ مصرعہ “آسمانن دامنس تل رٹ زمین”۔ اتھ پیٹھ وننہ آمتٮن غزلن ہندۍ زیادہ متاثر کرن والۍ کینہہ شعر چھہ درج:

اسۍ چھہِ کوتر لامکانکۍ وپھ تُلو
تل پتالس سیتۍ کرۍ تن أٹ زمین (رفیق راز)

سیتۍ اوسم شنیہس منز سرۍیہ ژونگ
ٲس شانن پیٹھ میہ تجمژ مٔٹ زمین (ایاز رسول نازکی)

آسمانچ شبنم افشانی بجا
وقتہ کٮن زخمن چھیہ مرہم پٔٹ زمین (محمد رمضان)

تالہِ پیٹھ دوٚدمت شہل ون یارِ ہند
تل پدٮن شیدا چھیہ اڈ دٔز ۂٹ زمین (علی شیدا)

اتھ طرحس منز اوس غیر مستعمل قافیہ یمہ کنۍ شعر بناونۍ مشکل تہِ اوس تہ پرامکان تہِ۔ رفیق رازن شعر چھہ انسانہ سنزِ روحانی حقیقژ کن اکھ بلیغ اشارہ۔ انسان چاہے کنہِ تہِ سنگین دۅلابس پھسہِ، سہ ہیکہِ نہ تتھ منز زیادہ کالس قید روزتھ یوٚت تام تسند خمیر تہ ضمیر صاف آسہِ۔ تقریبا یژھے ہش کتھ وننہ خاطرہ یم پیکر تہ استعارہ ورتاونہ آمتۍ چھہِ تم چھہِ سیٹھا دلچسپ۔ کوتر چھہِ تمن جاناوارن منز یم زمینہِ تھوٚد آسمانس منز پرواز کران چھہِ۔ تلپتال چھیہ سۅ جاے یمہ منزہ نیرُن مشکلے اوت نہ بلکہ ناممکن تہِ چھہ۔ وپھہِ منز چھہ موٚر ترٲوتھ ژلنک تہِ معنی موجود۔لامکان، تل پاتال، کوتر لفظن ہند ورتاو ہ تہ زمین تہ تل پاتال سیتۍچھہ اتھ شعرس منز داستانوی رنگ پیدہ گوٚمت۔ ایاز رسول نازکی چھہ عجیب غریب صورت حالک اظہار کران۔ اتھ منز تہِ چھہ اکھ نیم داستانوی فضا قایم گژھان یتھ منز سرۍیہ ژٲنگس برابر مۅژان چھہ تہ زمین چھہ مچہ ہندۍ پاٹھۍ شانن لدتھ متکلم شنیاہ کس سفرس پیٹھ نیران۔ یتھٮن شعرن چھہِ نہ لفظی معنی قایم گژھان بلکہ چھہ اکھ مبہم تاثر وۅتلان یس معنوی امکاناتن کن اشارہ کٔرتھ ہیکہِ۔محمد رمضان سندس شعرس منز چھیہ قول نبنچ قابلیت موضوع مطلب تہ ارتکازہ کنۍ پیدہ گمژ۔ یہ چھہ غالب سند شعر “رگ لیلی کو خاک دشت مجنوں ریشگی بخشے” تہ اقبال سند شعر “آسماں تیری لحد پر شبنم افشانی کرے” دۅشوے یاد پاوان تہ یمن دۅشونی شعرن ہندۍ معنوی امکانات چھہِ اتھ منز داخل گژھان یم شعر کس مبہم صورت حالس روشن کران چھہِ۔ علی شیدا سندس شعرس منز چھہ تتھٮن مشکل حالاتن ہند اظہار یم سانۍ حقیقت تہ سون اعتبار دۅشوے اکی رنگہ اذیت ناک بناوان چھہِ۔ یہ ہشر چھہ ون یارِ (اعتبار/یقین) تہ اڈ دز ۂٹ (حقیقت) سیتۍ قایم گژھان۔ ون یٲر نہ بلکہ چھہ ون یارِ ہند شہل دوٚدمت یس سانہِ اعتبارک آسن، نہ آسنس منز تبدیل کران چھہ۔

یمن مشاعرن منز یتھۍ یتھۍ شعر برونہہ کن یُن چھہ کاشرِ غزلیہ شاعری ہندٮن توقعاتن منز بے شک ہرٮرکران۔

رفیق راز

کوٚتام روزہ وۅں فریادۍ ہیو برس تل بہ
تھکاں تہ چھس نہ ہلاوان چھس یہ ہانکل بہ

جنون تیُتھ چھہ زِ ویرانہ کھوٚت نہ ٹاری کانہہ
یمو اتھو وۅں ژٹکھ وارہ وارہ جنگل بہ

حشر وۅں سپدِ بپا کر سنا زمینہِ پٮٹھن
طنابہ تراوِ ژٔٹِتھ کر سنا یہ پاگل بہ

کجا سہ زیوٹھ سیکستاں کجا یہِ خیمہ نشین
سہ رنگہ رنگہ مکمل تہ نا مکمل بہ

رٹاں فقیر چھہِ اتھ کاژِ منز خبر کتھہ کنۍ
یواں چھُمے نہ اتھس منز یہ میون ہانژل بہ

أسی وحاطہ مکانس کٔرتھ زمانکۍ پاٹھۍ
ہُتٮن یہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ

رفیق رازہ مٮہ نارس اندر زمانا گوٚو
نہ تیز دروتھ بناں چھُس نہ تیز کرتل بہ
__

شہناز رشید

اندرۍ گۅلابہ وتھر نٮبرہ چھس دورۍ پل بہ
یہ کمۍ سا جادۍ گرن تھوونس پنجن تل بہ

مٮہ روٚس نہ کانہہ تہِ اکھا واوہ ہالہِ زالاں ژونگ
گوٚمت خدایہ ظہرۍ پورہ پاٹھۍ پاگل بہ

ژہ کورہ آکھ گژھکھ کوٚت تہ زاد رہ کیا چھے
یُتے پرژھٲے ہیا پانہ یتھ کُلس تل بہ

ہٮوان اوس یمیک ناو عزتہ سان شہر
ژٮہ عزتہ والہِ ضرور از گنڈے سۅ ململ بہ

اگر ژہ دۅہلہِ سہ کوتر وڈو کرکھ اسمانۍ
سیاہ رٲژ اندر پرٮزلہ زنتہ وزمل بہ

نہ سر پنن چھہ یہ نوٚمراں نہ میون گُر چھہ تھکاں
ہتٮن یہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ
__

برج ناتھ بیتاب

ہۅچھن کۅلن تہِ وساں منز، تہِ چھس کراں ژھل بہ
سریہس تہِ آب بنن گوٚژھ توے پھراں پل بہ

چھہ میون شہہ تہِ گوٚبے میانہِ براندہ کس ژٲنگس
ژہ سونچ پانہ زِ واوس ہٮکا کٔڈتھ کل بہ

سہ پرون ٲنہ پھٹتھ گوٚو وچھان یتھ بتھ ٲسۍ
وقت چھہ نوٚو تہ وچھاں وۅنۍ چھس ٲنہ سے مل بہ

کراں بھروسہ تتھے کنۍ ژہ از تہِ چھکھ لوکن
دِلا مٮہ ونتہ پزی ما گوٚمت یہ پاگل بہ

سۅ بونۍ ہوٚچھ تہ توے از چھہِ در بدر دۅشوے
ہتٮن چھہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ

سہ دراو ژورِ اجازت تہِ ما ہیوٚتن کٲنسی
برس توے تہ تھواں چھس وژھے یہ ہانکل بہ

مٮہ بس قصور یتے چھم مٮہ تھوٚو ہلم ؤہرتھ
کرم خبر یہ کمو کوٚر مگر وٹاں پھل بہ

دواں منیب طرح نوۍ تہ شعر اسۍ لیکھان
دپاں بٮتابہ قلم تُل تُلان چھس جل بہ
__

محمد رمضان

عجب سفر تہ سکھرنک کران ہل بل بہ
وقت چھہ شام تہ کمہِ تام آشہِ ہند غلبہ

نہ وتھ نہ کتھ، تہ نہ کانہہ میلہ کنۍ نہ کانہہ منزل
ہتٮن ہہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ

یہ راتھ گذرِ صبح نیرِ نوٚن مگر توٚت تام
دٔزتھ پٮوان چھہِ کٲتیا شمع امی طلبہ

چھہ گاشہِ نوو ژۅاپارۍ اچھ کٔرتھ ژرژان
چھکن کپارۍ الہی یہ رٲژ ہند ملبہ

مٮہ روٚس ڈۅکیوو یہ کس خستہ حال پتھ کن وچھ
لماں لسان یہ ما چھس پکان پیدل بہ

بہ کنڈۍ ببر مٮہ سجاوان کوہ سنا رمضان
نہ آرہ ول، نہ ینبرزل، نہ گل، نہ مسول بہ
__

نثار عظم
مٮہ چھم کُنٮر تہ کُنٮر چھس رٹاں وچھس تل بہ
نژاں چھیہ یادہ کُٹھس منز، کُنے برس تل بہ

وچھاں یتھے بہ چھُسن آنگنس اژان یہ گاش
دوان تٲرۍ برس چھُس تہ دارِ ہانکل بہ

ژٮہ روٚس یہ راتھ عذابچ قبر مٮہ باساں چھٮم
اگر نہ یکھ تہ دۅہس روزہ زن کۅہس تل بہ

نہ چانۍ خواب وچھاں بٔے، نہ ژیۍ وۅں سریہہ میونے
نہ ژٕے وۅں پورہ ژہ رودکھ نہ بے مکمل بہ

بنان چھس بہ دۅہس زیٹھہِ زیوٹھ صحراوا
یواں چھیہ راتھ تہ پھہلان زنتہ جنگل بہ

دواں چھہِ خواب حیاتکۍ اچھن فقط اسۍ زہ
ہتٮن چھہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ
__

الیاس آزاد

رٹان چھس تہِ اگر تارکن وچھس تل بہ
کران چھس وۅں دلس بار بار کیتھ ژھل بہ

نہ کنۍ چلٲو مٮہ کٲنسی نہ شہرہ کوٚڈہس بہ
گوٚمت چھُسے نہ مٮہ باسان ونتہِ پاگل بہ

ہہ گاش ییہ تہ خبر ہییہ نہ رٲژ پہرن تام
فضول دارِ پٹٮن کیازِ تھاوہ ہانکل بہ

نظر پییم تہ وچھم بوے دشمنن سٍتٮن
مگر مٮہ ونتہ زِ کتھہ کنۍ چلاوہ کرتل بہ

نہ کانہہ گمانہ دلس منز نہ کانہہ خۅداوند چھہ
ہتٮن چھہ دشت مسلسل یتٮن مسلسل بہ
__

رفیق راز

ژانگۍ ہوۍ اسۍ راتھ کیت شولاں چھہِ سٲری
زیر لٔج پردس تہ بس لرزاں چھہِ سٲری

زن بنیل سانٮن زلٮن تل ڈاپھ ترٲوتھ
سڑکہِ پیٹھ اسۍ لوکۍ بٔڈۍ نیراں چھہِ سٲری

یتھ زمینس تل چھہِ کم کم سرۍیہ دوٚبرتھ
یتھ زمینس تٲبیا اسماں چھہِ سٲری

یا تواریخے چھہِ نٔو اسۍ کانہہ بناوان
یا تواریخک قرض ہوراں چھہِ سٲری

نے مریدے کانہہ نہ مرشد کانہہ چھہ کٲنسی
لوکھ شہرکۍ صاحب عرفاں چھہِ سٲری

منزلن ہند شوق تامتھ چھکھ نہ در من
قافلس منز بے سروساماں چھہِ سٲری

ٲسۍ یم سرتازہ چانی سٍتۍ کرتاں
تم دلن ہندۍ داغ از ویراں چھہِ سٲری
__

شانتی ویر کول

گاشلی ییتہِ دارِ بر تروپراں چھہِ سٲری
زیر لٔج پردس تہ بس لرزاں چھہِ سٲری

شرۍ جماتھا چھم تہ گرہ چھم ونہِ تہِ ؤہرتھ
کس اتُر کوٚرمت یہ چھکھ مندچھاں چھہِ سٲری

نا سزا یتُھ کیا کوٚرن وۅنۍ زانہِ قۅدرت
بس اکُے آدم چھہ یس نالاں چھہِ سٲری

ژوٚک موٚدر لوٚت گوٚب چھہ آمت بارنٮن منز
ادہ نباواں یاتہ ورتاواں چھہِ سٲری

خۅش تھوُن دنیا تہ خۅش روزُن چھہ مشکل
پوٚز وناں، پوٚز وننہ ییتہِ روشاں چھہِ سٲری
__

خالد بشیر

اکھ نظر اوکن تُلاں ٹھہراں چھہِ سٲری
زانہِ دے اتہِ کیا چھہ یُتھ، حیراں چھہِ سٲری

دپھ تسند گفتار زن ادفر چھہ ملۍ ہیوٚن
از تمس سودا گرس پراراں چھہِ سٲری

کرٮکھ چھیہ شہرس از چھہ بختس پھُیر لگن وول
لوکھ سڑکن پیٹھ توے نیراں چھہِ سٲری

اسہِ یہ گدریومت چھہ تمۍ کرۍ متۍ چھہِ گاٹلۍ
تروٚپ چھہ ٲسن دِتھ مگر زاناں چھہِ سٲری

اکھ ہوا رِنگ، آبہ جۅے، بلبل تہ جنگل
یتھ دلس گٔدرس مٮہ تنبلاواں چھہِ سٲری

وچھ دزاں مندورِ منز کُس، سڑکہِ پیٹھ کُس
اسۍ یمن ژانگٮن نسب زاناں چھہِ سٲری
__

محمد رمضان

دارِ بر تروپرتھ مگر بوزاں چھہِ سٲری
شور شہرس منز چھہ کیا حیراں چھہِ سٲری

ناو دریاوس اندر طوفاں بٹھٮن پٮٹھ
واو بدلے داو پوٚک حیراں چھہِ سٲری

ٲس کمہِ پوشچ سۅ خۅشبو اسہِ ژۅاپارۍ
وۅنۍ ستن وارٮن اندر ژھاراں چھہِ سٲری

چانہِ بر تل رٲژ راوٮم ژانگۍ لٕے ہٮتھ
کیا ہٮکے آواز دِتھ بوزاں چھہِ سٲری

کتھ بٮہ پژھ سفرس پیٹھ اسۍ درامتۍ چھہِ، یعنی
شہہ أکس پتھ کُن گژھاں راواں چھہِ سٲری

کانہہ چھہ ووناں ییر کانہہ رمضان ریشم
قالبافی ہند ہۅنر ہاواں چھہِ سٲری
__

ظفر مظفر

تاپھ توٚت ما زالہِ وہۍ ترہراں چھہِ سٲری
رود گوٚژھ تراوُن وۅں دے پراراں چھہِ سٲری

چون رۅخ ڈیشتھ چھہِ روزاں ژورِ تارکھ
زونہ گاشس گوٚو گچر حیراں چھہِ سٲری

رٲچھ کرنک اوس گوٚنڈمت ہوٚل یمو تم
لوٹھ گٔے شہرس کٔرتھ کھوژاں چھہِ سٲری

واو ووٚتھ ژھٮتہ ژانگۍ گٔے ژھایو نژن ہیوٚت
زیر لج پردس تہ بس لرزاں چھہِ سٲری

کوٚت گژھن کتہِ آے چھہ نہ معلوم کٲنسی
بۅکھچہ شانن پیٹھ فقط دوراں چھہِ سٲری
گاش کوٚرمت چھکھ دفن غارن گۅپھن منز
انہِ گٹس منز قد پنن میناں چھہِ سٲری

پچنہِ لگۍ بلبل چھہ شاید سونتھ آمت
پوش کتہِ ونہِ پھوٚلۍ تہ بلۍ توشاں چھہِ سٲری

دیت طرح نیبن کلاما راز صابن
باز ژٕے زینکھ ظفر غزلاں چھہِ سٲری
__

نثار عظم

توکلکۍ سر اکھ اکس باواں چھہِ سٲری
گاشہ لٕے اکھ تتھ مگر زاگاں چھہِ سٲری

اٹلسس لتھ دنۍ سہل کتھ ما چھیہ یارو
اوس کیا، سپدیوو کیا حیراں چھہِ سٲری

یس و سے سونچاں بہ دمہ ہا نالہ اتھ منز
یتھ سیکستانس توے زاگاں چھہِ سٲری

بلۍ تہِ ما لتہ موٚنڈ کراں اسۍ یتھ زمینس
پننہِ پننی جایہ اسۍ اسماں چھہِ سٲری

کانہہ کپر ژادر نہ کانہہ دستار ڈیشو
وارہ وارے کج کلاہ مۅکلاں چھہِ سٲری
__

رفیق راز

جویہ ہاراں کُس چھُ چشمو پھٹ زمین
کمۍ سنا آبن پھرس تل رٹ زمین

ٲس لجمژ گرشمہ کراین زٹ زمین
’آسمانن دامنس تل رٹ زمین

اسۍ چھِ کوتر لا مکانکۍ وُپھ تلو
تل پتالس سیتۍ کرۍ تن اٹ زمین

پے خزانُک دراو غلطے ٲخرس
وُلۍ کٔرِس کٲتیا تہ کھنۍ کھنۍ ژٹ زمین

درایہ سفرس آسمانن کن بچٲرۍ
تہہ کرِتھ تھٲوکھ فقیرو وٹ زمین

کیا ونے کر کر یہ نب ناراض گو
کیا ونے کر کر بلایو رٹ زمین

کس شکارس پیٹھ امس لاینۍ چھیہ جپھ
شیر خوں خوارن پدٮن تل رٹ زمین
__

ایاز رسول نازکی

سریہ ترٲوتھ گوس وہۍ انہِ گٔٹ زمین
آسمانن دامنس تل رٔٹ زمین

سانۍ پاٹھی یہ تہِ گمژ نوزک مزاج
واوہ رنگا رودہ راٹھا پھٔٹ زمین

چھیکرس باسیوو ہن ہن گٔے گلان
اسہِ تہِ قدمو ستۍ کینژھا ژٔٹ زمین

بالہ تینتٲلس کھستھ گوٚو غیب موٚت
دامنس پننس اندر تمۍ ؤٹ زمین

کٍتۍ صحرا کم سمندر نجدہ ون
میلہ میلے درایہ اکھ اکھ پٔٹ زمین

سٍتۍ اوسم شنیہس منز سریہ ژونگ
ٲس شانن پیٹھ مٮہ تجمژ مٔٹ زمین

آسمانن منز وپھاں اوسم ایاز
نالہ متہِ تمۍ راتھ بوزم رٔٹ زمین
__

برج ناتھ بیتاب

کاغذس پیٹھ یمۍ نہ تمۍ زن ژٔٹ زمین
کانہہ اکھا ونۍ تو کمس زن مٔٹھ زمی

آستانن پیٹھ فقیرو ڈیرہ تراوۍ
آسمانن دامنس تل رٔٹ زمین

نفرتچ سۅے کیازِ کھژ ریشۍ وارِ منز
غفلتس منز کٲنسہ ما کٔر ژھٔیٹ زمین

آسمانس کۅم کٔرتھ والاں چھہِ یورۍ
آدمن پھولوو دنیا ؤٹ زمین

جوگۍ دوٚپ ماجٮن کٔرِو آلو شرٮن
چاک گوٚو اسماں تہ یکدم پھٔٹ زمین

منزۍ منگاں سگ وانہِ چھٮم خون جگر
کیا ونے چھٮم باگہِ آمژ پھٔیٹ زمین

ہارنس تاپس اندر پیوٚو تیوت شین
وۅلسنس یِتھ تانڈوس منز نٔٹ زمین

پوٚز ژہ چھکھ ہوہس اندر بیتابہ سونچ
کالۍ کُنہِ کتھہِ پیٹھ کری زن زٔٹ زمین
__

محمد رمضان

خونہ سگوِتھ، میژِ ہنز اکھ میٔٹ زمین
گاشرٲوتھ ژیۍ دلن ہنز گٔٹ زمین

آسمانچ شبنم افشانی بجا
وقتہ کٮن زخمن چھیہ مرہم پٔٹ زمین

یلہ یقینن نیبرہ ہنۍ روو آسمان
اندرہ بند گامتۍ گمانن ژٹ زمین

دۅہلہِ راتس گاشرٲوِتھ تتۍ تژھے
کمۍ سنا انہِ گٹۍ نٮبر کن ژھٔٹ زمین

غزلہِ منز رمضان کم نوۍ گل پھۅلن
امہِ نمودچ ٲخری کہؤٹ زمین
__

علی شیدا

شنیہ متۍ ما نی اچھن دتھ پٔٹ زمین
ہنگہ تہ منگہ لبہِ ہے نہ سرۍیس گٔٹ زمین

سایبانس نار لوٚگ سیکلس اندر
سجدہ دتھ کمۍ تاں ڈٮکس تل رٔٹ زمین

ژوٚک گوٚمت شاید چھہ تلپاتال سے
تارہ تروُن جوگۍ مۅچھہِ منز رٔٹ زمین

گوٚو وشف پیوٚو اشۍ پھیورا صبحے پتھر
ڈوٚل یُپس شپ تے برنزس منز پھٔٹ زمین

کھوٚت غمن ہند بار گوٚو ٹارٮن الوند
ووٚتھ اچھو بارانہ دگنیو ژھٔٹ زمین

تالہِ پیٹھ دوٚدمت شہل ون یارِ ہند
تل پدٮن شیدا چھیہ اڈہ دٔز ۂٹ زمین
__

زمرے:تبصرہ

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s