کاشرۍ ادبی رسالہ


کونگ پوش

 

 

 

 

 

 

 


گلریز

gulrez1945 ہس منز بنوو مرزا عارفن اکھ ادبی تنظیم "بزم ادب” امی تنظیمہ کہ طرفہ دراو گلریز رسالک گۅڈنیک شمارہ نومبر 1952 ہس منز۔ اتھ چھہ بانی مرزا عارف تہ ترتیب امین کامل تہ پرنٹرپبلشرمحمد صدیق کبروی چھپتھ۔ فروری 1953 منز آو کامل سبکدوش کرنہ تہ محی الدین حاجنی تہ عبدالحق برق بنییہ کامل سنزِ جایہ ترتیب کار۔ 1955 ہس منز بند گژھتھ، آو 1961 منز یہ رسالہ دوبارہ کڈنہ، مرزا عارفن رٹۍ غلام نبی خیال تہ مرزا حبیب الحسن پانس سیتۍ۔

بزم ادب اوش کاشر ادبک اکھ اہم تنظیم۔ اتھ منز ٲسۍ کاشرِ ادبکۍ بڈی بڈۍ ادیب حصہ نوان۔ پننۍ نگارشات پران تہ تمن پیٹھ اوس بحث سپدان۔

امہِ رسالکۍ تقریبا سٲری شمارہ چھہِ ییتہ نس پی ڈی ایف چہ شکلہِ منز دستیاب۔

 


کاشر ادب

اکتوبر 1966 منز کو٘ڈ غلام رسول سنتوشن اکھ رسالہ یتھ "کاشر ادب” ناو اوس۔ سانین بہترین رسالن منز چھہ یہ یقینا شامل۔ ادبی kadabصلاح کارن منز تھٲون دینا ناتھ نادم، علی محمد لون، امین کامل تہ بنسی نردوش۔ تم ادیب یم سنتوشس نزدیک ٲسۍ۔ دۅیو شمارو پتہ چھہ کامل صلاح کارو منزہ نیران تہ رسالہ چھہ اپریل 1967 شییم شمارہ نیرتھ بند گژھان ۔

کاشر ادب کہ گۅڈنکہ شمارہ پتہ برابر دۅیہ وہرۍ تہ بند گژھنہ پتہ برابر نوِ ریتۍ چھہ کامل پنن رسالہ نیب شروع کران۔ کاشر ادب چھہ نیبک ژورم شمارہ نیرنہ پتے اکھ ؤری ژور ریتہ کہ وقفہ پتہ اگست 1969 منز دوبارہ نیران۔ ٲٹھمہِ شمارہ (دسمبر 1969) پیٹھہ چھہ اتھ اکھ ادارہ بنان یمن منز محمد یوسف ٹینگ، اوتار کرشن رہبر تہ فاروق نازکی آسان چھہِ۔ میانہِ علمہ مطابق چھہِ یہندس ناوس تل اتھ  نیب رسالس لرِ لو٘ر بییہ تریہ شمارہ نیران تہ ٲخری کہم شمارہ نیرتھ چھہ 1969 یک ؤری سورنس سیتی بند گژھان۔ نیب تہِ چھہ برابر ترییہ وہرۍ 17 شمارہ نیرتھ اکتوبر 1971 منز بند گژھان۔

امہِ رسالکۍ تقریبا سٲری شمارہ چھہِ ییتہ نس پی ڈی ایف چہ شکلہِ منز دستیاب۔


نیب

نیب رسالہ کوٚر اکتوبر 1968 منز امین کاملن سرینگرہ شروع۔ اکتوبر 1971 تام درایہ اتھ 17 شمارہ یمہِ پتہ یہ مجبورا بند کرنہ آو۔Neab 30 web نیب اوس تمہ وقتہ سٮٹھا ہردلعزیز رسالہ یمۍ واریاہ نوۍ تہ نوجوان لیکھن والۍ برونہہ کن انۍ تہ کاشرس ادبس منز اکھ نوٮر یعنی جدیدیت انۍ۔

یہ رسالہ آو دوبارہ باسٹن امریکہ پیٹھہ 2005 منز کڈنہ۔

امہِ رسالکۍ تقریبا سٲری شمارہ چھہِ ییتہ نس پی ڈی ایف چہ شکلہِ منز دستیاب۔

 

 

 

 

 

 


واد